گزشتہ سال پشاور میں کتنی زبردستی شادیاں ہوئیں؟

0
84

ہاٹ لائن نیوز :پشاور میں خواتین اور لڑکیوں کی جبری شادی کا سلسلہ گزشتہ سال 2023 کے دوران بھی نہ رک سکا، 2023 کے دوران پشاور میں 35 خواتین اور 18 کمسن لڑکیوں کی جبری شادیاں دیکھنے میں آئیں۔

پشاور میں خواتین اور کمسن بچوں کی جبری شادیوں سے متعلق پولیس رپورٹ سامنے آئی ہے جس کے مطابق 2023 میں خواتین اور بچیوں کی جبری شادیوں کی 53 ایف آئی آر درج کی گئیں۔

رپورٹ کے مطابق ملزمان کے خلاف 50 مقدمات میں کارروائیاں کی گئیں اور خواتین اور لڑکیوں کی جبری شادی میں ملوث 53 افراد کو گرفتار کیا گیا۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سال 2023 میں 35 خواتین اور 18 کمسن بچوں کی زبردستی شادی کی گئی، جبری شادی سے متاثرہ 16 خواتین اور 11 لڑکیوں کو شیلٹر ہومز میں منتقل کیا گیا۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ ان متاثرہ خواتین اور لڑکیوں میں سے زیادہ تر کو پہلے اغوا کیا گیا اور بعد میں ان کی زبردستی شادی کرائی گئی، بعض واقعات میں ان متاثرہ خواتین اور لڑکیوں کے اہل خانہ بھی جبری شادیوں میں ملوث پائے گئے۔

Leave a reply