پبلک سیفٹی و پبلک سیکورٹی کمیشن بنانے کا عدالتی حکم جاری

0
96

ہاٹ لائن نیوز : لاہور ہائیکورٹ نے حکومت کو تیس دن میں صوبائی پبلک سیفٹی کمیشن اور ضلعی پبلک سیکیورٹی کمیشن نوٹیفائی کرنے کا حکم دے دیا۔

لاہور ہائیکورٹ نے مفاد عامہ کی درخواست پر چھ صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلہ جاری کر دیا ۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ جمع کرائی گئی رپورٹ کے مطابق کابینہ نے فیصلہ کیا کہ یہ معاملہ نئی منتخب حکومت دیکھے گی۔

کابینہ کی سفارشات دیکھ کر پتا چلتا ہے کہ نگران حکومت کی جانب سے نااہلی کا مظاہرہ کرتے ہوئے معاملے کو موخر کیا گیا ، پولیس آرڈر دو ہزار دو کے سیکشن سینتیس کے تحت صوبائی پبلک سیفٹی کمیشن اور ضلعی پبلک سیکیورٹی کمیشن تشکیل دینا حکومت کی زمہ داری ہے ۔

یہ بات تسلیم شدہ ہے کہ پولیس آرڈر کے نفاذ سے لیکر آج تک پبلک سیفٹی کمیشن تشکیل نہیں دیا گیا ، کمیشن کا مقصد پولیس کے صوابدیدی اختیار پر چیک رکھنا ہے۔بدقسمتی سے منتخب اور نگران حکومت نے قانونی ذمہ داری کو نظر انداز کیا ہے۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ اگر کوئی پبلک اتھارٹی اپنی ذمہ داری پوری نہیں کر رہی تو وہ قانون اور آئین کی خلاف ورزی کر رہی ہے ، بدقسمتی سے ملک میں منتخب نمائندگی کے تسلسل کی موجودگی نہیں ہے۔لاہور ہائیکورٹ نے آخری لوکل گورنمنٹ کے نمائندوں کو لیکر پولیس آرڈر دو ہزار دو کے سیکشن سینتیس پر عملدرآمد کرانے کا حکم دے دیا۔

عدالت نے حکومت کو کمیشن کے نوٹیفیکیشن اور نگران حکومت کو درپیش مشکلات سمیت عملدرآمد رپورٹ پیش کرنے کی بھی ہدایت کر دی۔

Leave a reply