جسٹس (ر)وجہیہ الدین کا حکومت پر ایک اور وار! عمران خان کے پُرانے راز فاش کرنا شروع کر دیئے

کراچی(ہاٹ لائن نیوز) وزیراعظم عمران خان پر لگائے گئے الزامات کے حوالے سے حکومت کی جانب سے ہتک عزت کا مقدمہ دائر کرنے کے اعلان کے باوجود جسٹس ریٹائرڈ وجیہ الدین نے کہا ہے کہ میں نے جو بھی کہا وہ سچ ہے اور اگر کوئی ہتک عزت کا مقدمہ کرنا چاہتا ہے تو ضرور کرے۔

جسٹس ریٹائرڈ وجیہہ الدین نے ایم کیوایم رہنماؤں کے ساتھ میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ ایم کیوایم کے ساتھ مل کرکام کرنے پر اتفاق کیا گیا ہے جبکہ خالد مقبول صدیقی بولے کہ ہمارے درمیان کئی چیزیں مشترک ہیں، ملک کو حقیقی جمہوریت اور فعال عدالتوں کی ضرورت ہے۔

فواد چوہدری کی جانب سے ہتک عزت کے مقدمہ دائر کرنے کے حوالے سے سوال پر جسٹس وجیہہ الدین نے کہا کہ میں نے جو کچھ بھی کہا ہے وہ سچ ہے، اگر کوئی صاحب ہتک عزت کا مقدمہ کرنا چاہتے ہیں تو ضرور کریں، عدالتیں کھلی ہوئی ہیں، قانون کی عملداری کا تو مطلب ہی یہی ہے کہ اگر کسی کے حقوق کی پامالی ہوئی ہے تو وہ عدالتوں میں جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ سوال یہ ہے کہ حقوق کی پامالی فواد چوہدری کی ہوئی ہے یا عمران خان کی ہوئی ہے، اگر ہتک عزت کا مقدمہ بالخصوص کریمنل مقدمہ دائر کرنا ہے تو ایف آئی آر کون کٹواتا ہے، وہ شخص جس کے گھر پر واردات ہوئی ہو یا کوئی راہ چلتا آدمی ایف آئی آر کٹوائے گا.

انہوں نے کہا کہ جہاں تک جہانگیر ترین کی جانب سے تردید کی بات ہے تو وہ آخر کرتے بھی کیا، کیا وہ کہتے کہ میں اخراجات کرتا رہا ہوں، اس طرح کے اخراجات کی کوئی دستاویزی شکل نہیں ہوتی لہٰذا ان کے لیے اس کی تردید کرنا بہت آسان تھا۔


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (0) in /home/hotlinenews/public_html/wp-includes/functions.php on line 5107