41

گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑھ گئے جبکہ حکومت شاہ خرچیوں میں مصروف ہے!!! شیری رحمان نے حکومت کی کلاس لے لی

کراچی(ہاٹ لائن نیوز ) سینیٹر شیری رحمٰن نے گیس بحران پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ آج کل گیس صنعتوں کو فراہم کی جا رہی ہے نہ گھریلو صارفین کو دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت موجودہ ٹرمینلز کی صلاحیت استعمال کرنے میں ناکام ہے، اسٹوریج اور ٹرانسمیشن کے مسئلے کو بھی حل ہی نہیں کیا گیا۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ توانائی بحران سپلائی نہیں حکومتی نااہلی اور بدترین گورننس کی وجہ سے ہے، توانائی پالیسی نہ ہونے اور اداروں میں رابطے کے فقدان کی قیمت ملک و عوام ادا کررہے ہیں۔ پی پی کی نائب صدر شیری رحمٰن نے کہا کہ گیس اور بجلی کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے کے باوجود بحران ختم نہیں ہوا بلکہ بڑھ رہا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں