44

وزیر عظم کی موجودگی میں حلیم عادل شیخ اور ارباب غلام رحیم میں تلخ کلامی! عمران خان کو کیا کرنا پڑ گیا؟

کراچی(ہاٹ لائن نیوز ) وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت گورنر ہاؤس سندھ میں ہونے والے اجلاس میں معاون خصوصی ارباب غلام رحیم اور سندھ میں اپوزیشن لیڈر حلیم عادل شیخ میں تلخ کلامی ہوگئی۔

نجی چینل کے ذرائع کے مطابق اجلاس میں ارباب غلام رحیم نے گورنر سندھ کے خلاف شکایتوں کے انبار لگا دیے اور کہا کہ ہمارے لوگوں کے خلاف انتقامی کاروائیاں ہورہی ہیں، گورنر سندھ اپنا کردار ادا نہیں کرتے۔

ارباب رحیم کی شکایات پر وزیر اعظم عمران خان نے گورنر سندھ سے سوال کیا تو گورنر سندھ نے اپوزیشن لیڈر حلیم عادل شیخ کو آگےکردیا۔

حلیم عادل شیخ نے ارباب غلام رحیم کے الزامات کو رد کردیا اور کہا کہ ارباب غلام رحیم معاون خصوصی ہونے اور مراعات کے مزے لے رہے ہیں، یہ اسلام آباد میں ہوتے ہیں انہیں سندھ کے معاملات کا علم نہیں۔

اس کے بعد حلیم عادل شیخ اور ارباب غلام رحیم کے مابین سخت جملوں کا تبادلہ ہوا اور وزیر اعظم عمران خان کو ماحول بہتر کرنے کیلئے مداخلت کرنا پڑی۔

اجلاس کے بعد گورنرسندھ سمیت سب کو باہربھیج دیا گیا اور اپوزیشن لیڈر سندھ حلیم عادل شیخ سے وزیراعظم نے اکیلے میں گفتگو کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں