42

ای وی ایم انتخابی اصلاحات نہیں تو کیا ہے؟؟؟فرخ حبیب کا بلاول بھٹو سے سوال،کھری کھری بھی سنا دی

اسلام آباد(ہاٹ لائن نیوز)بلاول بھٹو زرداری کی پریس کانفرنس کے رد عمل میں فرخ حبیب نے پیپلزپارٹی اور خاص طور پر بلاول بھٹو سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ بلاول بھٹو آج بلدیاتی نظام میں اصلاحات کی بات کر رہے ہیں تو الیکٹرانک ووٹنگ مشین(ای وی ایم) پر کیوں نہیں مشاورت کرتے؟ کرپٹ سیاسی جماعتیں کبھی بھی انتخابی اصلاحات کی بات نہیں کر سکتیں۔

فرخ حبیب کا مزید تنقید کرتے ہوئے کہنا تھا کہ بلاول صاحب یہ کون سا بلدیاتی نظام ہے جس میں کوئی مشاورت ہی نہیں کی گئی؟اس بلدیاتی نظام کو پاس کرانے میں عجلت کیوں برتی گئی؟ پیپلزپارٹی تیرہ سال سےسندھ میں بر سر اقتدار ہے، سندھ کے عوام پیپلز پارٹی سے ہر صورت میں نجات چاہتے ہیں، اگر تیرہ سالوں میں سندھ حکومت نے کوئی ایک بڑا کام کیا ہے تو سامنے لائیں،سندھ حکومت کی نااہلی اور ذخیرہ اندوزوں کی پشت پناہی کے باعث سب سے زیادہ مہنگائی کراچی میں ہے۔

وزیر مملکت نے کہا کہ پنجاب میں بیس کلو آٹے کا تھیلا گیارہ سوروپے میں جبکہ کراچی میں چودہ سوروپے کا فرخت ہورہا ہے،سندھ میں اربوں کی گندم چوری کرلی جاتی ہے اور کوئی پوچھنے والا نہیں، کاغذوں میں سندھ میں اربوں روپے صحت اور تعلیم کے شعبے پرخرچ ہوئے لیکن آج بھی سندھ کے ہسپتالوں میں ایمبولینس نہیں ہیں، سندھ کے عوام کو ٹینکر مافیا، گرانفروشوں اور لینڈ مافیا کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے، جعلی ڈومیسائل پر نوکریوں کا اعزاز بھی پیپلز پارٹی حکومت کو ہی حاصل ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں