چیئرمین نیب کی پیشی! پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے کن کیسز کی تفصیلات مان لیں؟ بڑی خبر

اسلام آباد(ہاٹ لائن نیوز) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رکن رانا تنویر کی زیر صدارت پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس ہوا۔چیئرمین پی اے سی رانا تنویر نے چیئرمین نیب کی پیشی پر کہا کہ کفر ٹوٹا خدا خدا کر کے، بڑی دیر کر دی آپ نے آنے میں، آپ ہمارے لیے قابل احترام ہیں لیکن آپ نے یہاں آنے میں بڑی دیر لگا دی۔

چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا کہ کسی شخص کو پارلیمنٹ کی بالادستی سے انکار نہیں، مجھے احساس ہے کہ میں ایک، دو مرتبہ نہیں آ سکا، اس کی جائز وجوہات ہیں، میں مغل شہنشاہ نہیں ہوں۔ان کا کہنا تھا کہ پارلیمنٹ سب سے بالادست ادارہ ہے، نیب آئین و قانون سے بالاتر نہیں ہے، خامیوں سے پاک کوئی بھی نہیں ہے اور میں نے اپنے دور کا مکمل آڈٹ کروایا۔

اس موقع پر چیئرمین پی اے سی رانا تنویر نے کہا کہ کمیٹی نے ریکوری کی تفصیل مانگی تھی، صرف دو لائنوں کا جواب دیا گیا، ہم نے پوچھا تھا کہ بتائیں لوٹی گئی رقم کتنی ہے، ڈیفالٹ کی رقم کتنی ہے، ہاؤسنگ سوسائٹیوں سے کتنی وصولی ہوئی؟

جسٹس(ر) جاوید اقبال نے کہا کہ ہم ایک،ایک روپے کا حساب دیں گے، نیب نے ہاؤسنگ سوسائٹیوں سے اربوں روپے لےکر بیس ہزار افراد میں تقسیم کیے، اس وقت تیرہ سو چھیاسی ارب روپے کے ایک ہزار دو سو ستر ریفرنس زیر التوا ہیں۔

پی اے سی نے ریکوری کی تمام تفصیلات اور زیر التوا انکوائریز و مقدمات پر بریفنگ کیلئے 6 جنوری کو ان کیمرا اجلاس طلب کر لیا۔


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (0) in /home/hotlinenews/public_html/wp-includes/functions.php on line 5107