آج قومی سلامتی کمیٹی میں کیا گفتگو ہوئی؟ جی ڈی اے کی رُکن اسمبلی سائرہ بانو کا ایسا جواب کے وزیر اعظم بھی ناراض ہوگئے

اسلام آباد(ہاٹ لائن نیوز )قومی سلامتی کمیٹی کے ان کیمرہ اجلاس ہوا۔جس میں نیشنل ایکشن پلان سمیت مختلف موضوعات زیر بحث آئے۔ان کیمرہ بریفنگ کے بعد اراکین باہر آئے تو حکومتی اتحادی جی ڈے اے کی سائرہ بانو کو صحافیوں نے گھیر لیا اور ان سے سوال پوچھا کہ آج کی قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں کیا پالیسی بنی۔

کیا کوئی پالیسی بنی بھی یا نہیں۔جس پر سائرہ بانو کچھ طنزیہ انداز میں یو مخاطب ہوئی کہ ”سونے سے پہلے کنڈی لگا کر رکھیں، کُھلے برتن ڈھانپ کر رکھیں، رات کو ہیٹر بند کر دیں، بجلی کی چیزوں کو پاتھ مت لگائیں اور دوائیاں بچوں کی پہنچ سے دور رکھیں”۔ جس پر صحافی بھی حیران ہو گئے۔

میڈیا ذرائع کے مطابق سائرہ بانو کو یہ بیان دینا مہنگا پڑھ گیا کیونکہ ان کے بیان پر وزیر اعظم نے بھی ناگواری کا اظہار کیا اور جس کا پیغام پاکستان تحریک انصاف کے چیف وہپ عامر ڈوگر نے سائرہ بانو کو دیا۔

عامر ڈوگر نے سائرہ بانو سے کہا کہ وزیراعظم آپ کے بیان سے سخت ناراض ہیں۔سائرہ بانو کا پارلیمانی قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کے بعد بیان عامر ڈوگر کو بھی ناگوار گزرا۔ ساتھ ہی عامر ڈوگر نے قومی اسمبلی قائمہ کمیٹی برائے تخفیف غربت کا کل ہونے والا اجلاس بھی ملتوی کر دیا۔ اس التوا کو اس لیے بھی توجہ دی گئی کہ اس اجلاس میں سائرہ بانو کو قائمہ کمیٹی کی چئیرمین شپ دی جانی تھی


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (0) in /home/hotlinenews/public_html/wp-includes/functions.php on line 5107