27

عیسائی برادری کے تحفظات ہیں، جلسے کی اجازت نہیں دینگے، وزراعلیٰ پنجاب

وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز نے کہا ہے کہ عیسائی برادری کے تحفظات کی وجہ سے پی ٹی آئی کو جلسے کی اجازت نہیں دے سکتے ہیں۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے میڈیا سے گفگتو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کسی اور عوامی جگہ پر جلسہ کرلے لیکن وہ پرائیوٹ گہ ہے وہاں ہر گز جلسے کی اجازت نہیں دی جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ ہماری انتظامیہ نے ان سے رات کو تین گھنٹے مذاکرات کیے عیسائی برادی کے تحافظات ہیں، وہ پرائیوٹ جگہ ہے۔انہوں نے بتایا کہ انتظامیہ نے پی ٹی آئی سے کہا کہ کوئی پبلک پلیس پر کرلیں لیکن انہوں نے بات نہیں مانی۔

اس موقع پر حمزہ شہباز کا کہنا تھا کہ عمران خان خون خرابہ چاہتا ہے ۔خیال رہے کہ سیالکوٹ میں سی آئی ٹی گراؤنڈ میں پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے جلسہ کرنے پر مسیحی برادری نے شدید احتجاج ریکارڈ کرایا ہے۔ اس حوالے سے مسیحی برادری کا کہنا ہے کہ یہ ہماری عبادت کی جگہ ہے، اسے جلسے کے لئے استعمال نہیں کیا جا سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ان لوگوں میں اتنی شرم نہیں کہ یہ عبادت گاہ کو جلسہ گاہ بنا رہے ہیں، ہم اپنی جانیں قربان کر دیں گے لیکن یہاں جلسہ نہیں ہونے دیں گے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کے لئے پیغام ہے کہ ہم اقلیتی ضرور ہیں لیکن جانور نہیں کہ جس طرح چاہو گے گھسیٹو گے، ۔

مسیحی برادی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ سیالکوٹ میں سی آئی ٹی گراؤنڈ مسیحی برادری کی ملکیت ہے۔خیال رہے کہ مسیحی برادری نے پی ٹی آئی کے جلسے کے خلاف عدالت میں کیس دائر کیا جس پر عدالت نے انتظامیہ کو گرائونڈ خالی کرانے کا حکم دیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں