13

پاکستان کیلئے کتنے ورلڈ کپ جیتنا چاہتا ہوں؟ بابراعظم نے اپنی بڑی خواہش کا اظہار کر دیا

لاہور (ہاٹ لائن نیوز ) پاکستان کے آل فارمیٹ کے کپتان اور ٹاپ رینکنگ وائٹ بال کے بلے باز بابر اعظم نے اگلے ڈیڑھ سال میں پاکستان کے لیے دو ورلڈ کپ جیتنے کے اپنے بنیادی ہدف کا اظہار کیا۔ بابر اعظم جو ایک سال سے زیادہ عرصے سے وائٹ بال کرکٹ میں شاندار فارم میں ہیں اور رینکنگ میں پہلے نمبر ہیں ، نے کہا کہ اگر وہ اپنی ٹیم کو ورلڈ کپ جتواتے ہیں تو ان کے رنز ایک گول کے قابل ہوں گے۔اس میں کوئی شک نہیں کہ میں اپنی فارم سے لطف اندوز ہو رہا ہوں لیکن اس فارم کے ساتھ میرا بنیادی ہدف اگلے ڈیڑھ سال میں پاکستان کے لیے دو ورلڈ کپ جیتنا ہے اور اگر ایسا ہوتا ہے تو میں محسوس کروں گا کہ میرے رنز سونے میں تولے جانے کے قابل ہیں۔ ون ڈے رینکنگ میں ٹاپ پوزیشن پر موجود بلے باز نے یہ بھی کہا کہ ان کی ٹیم کو 50 اوورز کے فارمیٹ میں خود کو ایک طاقت کے طور پر منوانے کے لیے بہتری لانی ہوگی۔بابر نے ویسٹ انڈیز کے خلاف کلین سویپ فتح کے بعد کہا کہ ہمیں اب بھی کچھ شعبوں میں بہتری لانے کی ضرورت ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم اب بھی ون ڈے میں مڈل اوورز میں کافی زیادہ وکٹیں کھوتے ہیں جو ہمیں بیک فٹ پر رکھتا ہے، یہاں کھلاڑیوں کو بہتر توجہ دینے کی ضرورت ہے، اس پر کام کیا جانا چاہیئے، فیلڈنگ میں بہتری آئی ہے لیکن ہماری باڈی لینگویج تب بھی بگڑتی ہے جب اچھی شراکت داری بنتی ہے، یہ ایک اور چیز ہے جسے ہم کوشش کر سکتے ہیں اور بہتر کر سکتے ہیں۔پاکستانی کپتان نے ویسٹ انڈیز کے خلاف حال ہی میں ختم ہونے والی ون ڈے سیریز میں اپنی ٹیم کی کارکردگی کا مزید جائزہ لیا اور ساتھ ہی ٹیم کی بینچ سٹرینتھ پر تبصرہ کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ اس سے انہیں ایک لفٹ ملتی ہے۔ بابر نے کہا کہ ہم نے ایک مختلف بولنگ یونٹ آزمایا اور انہوں نے بہت اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ بحیثیت کپتان یہ دیکھ کر بہت اطمینان ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بینچ کی طاقت ہمیشہ آپ کو ایک لفٹ دیتی ہے، یہ جاننا کہ آپ کے پاس بینچ پر ایسے کھلاڑی ہیں جو استعمال کرنے کے لیے تیار ہیں اچھا ہے۔ ہمارے پاس افتخار احمد، عبداللہ شفیق اور شاہنواز دہانی بنچ پر تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں