5

وزیراعظم اقوام متحدہ کے 77ویں اجلاس میں شرکت کے لیے امریکا پہنچ گئے

اسلام آباد (ہاٹ لائن)/ نیو یارک: وزیراعظم شہباز شریف اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 77ویں اجلاس میں شرکت کے لیے امریکا پہنچ گئے۔
وزیراعظم نے نیویارک پہنچنے کے بعد اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 77ویں اجلاس میں شرکت کے لیے وزیراعظم یو این ہیڈکوارٹر پہنچے جہاں اُن کی نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم جیسنڈا آرڈرن سے رسمی ملاقات ہوئی۔
وزیراطلاعات کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کا آج کا دن مصروف رہے گا کیونکہ وہ اجلاس کے بعد سائیڈ لائن ملاقاتیں کریں گے اور متعدد اعلیٰ سطح کی تقریبات میں شرکت بھی کریں گے۔
وزیر اعظم میاں محمد شہباز شریف سے وفد کی سطح پر آسٹریا کے فیڈرل چانسلر کارل نہامر کی ملاقات ہوئی جس میں دو طرفہ دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ملاقات میں وزیر خارجہ بلاول بھٹو، وزیر خزانہ مفتاح اسمعیل اور وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب بھی موجود تھے۔
شیڈول کے مطابق اقوام متحدہ کے اجلاس کی سائیڈ لائن پر وزیراعظم شہباز شریف فرانس کے صدر ایمانوئل میکرون، اسپین کے صدر پیڈرو سانچیز پیریز کاسٹیجن اور ایران کے صدر سید ابراہیم رئیسی سے دو طرفہ ملاقاتیں کریں گے۔
بعد از دوپہر کو وزیر اعظم شہباز کی نیویارک ٹائم کے ایڈیٹوریل بورڈ کے ساتھ بیٹھک ہوگی اور وہ ٹائمز سینٹر میں انٹرویو دیں گے۔ اس کے بعد ان سے امریکی خصوصی ایلچی برائے موسمیاتی تبدیلی جان کیری ملاقات کریں گے۔
وزیراعظم شہباز امریکی صدر جوبائیڈن کی جانب سے دیے جانے والے استقبالیہ میں شرکت کریں گے، امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ اس دعوت میں وزیراعظم کی امریکی صدر سے ملاقات ہوگی۔
دفتر خارجہ کے ایک اہلکار نے نام ظاہر نہ کرنے کی درخواست پر ایکسپریس ٹریبیون کو بتایا کہ وزیر اعظم اگرچہ بائیڈن کے ساتھ کوئی دو طرفہ ملاقات نہیں کریں گے لیکن استقبالیہ کے دوران امریکی صدر کے ساتھ غیر رسمی بات چیت کا امکان ہے۔
وزارتِ عظمی کا منصب سنبھالنے کے بعد امریکی صدر اور پاکستانی وزیراعظم کے درمیان یہ پہلی بات چیت ہوگی۔ امریکی صدر منتخب ہونے کے بعد سے بائیڈن نے شہباز شریف سے بلاواسطہ کسی بھی معاملے پر کوئی گفتگو نہیں کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں