لکڑی سے بنا پہلا سیٹلائٹ لانچ کےلیےتیار

0
133

ہاٹ لائن نیوز : ناسا اور جاپان ایرو اسپیس ایکسپلوریشن ایجنسی (JEXA) خلائی تحقیق کومزید پائیدار بنانے کیلیے اگلے سال دنیا کا پہلا لکڑی کا سیٹلائٹ لانچ کرنے کیلیے تیار ہیں۔

جاپان کی کیوٹو یونیورسٹی کے محقق کوجی موراتا اس بات پر تحقیق کر رہے ہیں کہ خلائی تحقیق کیلیے حیاتیاتی مواد کو کسطرح استعمال کیا جا سکتا ہے؟

نیشنل اوشینک اینڈ ایٹموسفیرک ایڈمنسٹریشن کی ایک تحقیق کے مطابق، 10 فیصد ایروسول (گیس میں ٹھوس یا مائع ذرات جو دھوئیں یا دھند کا باعث بنتے ہیں) میں خلائی جہاز کےذریعے سےخارج ہونے والے دھاتی ذرات ہوتے ہیں۔

اگرچہ اسکے طویل مدتی اثرات نامعلوم ہیں، لیکن سائنس دانوں کو تشویش ہے کہ زمین کی اوزون تہہ کو یہ نقصان پہنچا سکتا ہے۔

کوجی موراتا کے مطابق لکڑی کے سیٹلائٹ کا آئیڈیا بے حدپرکشش ہے کیوں کہ یہ دھاتی آلات کے متبادل کے طور پر کرہ ارض کیلیے بہتر ہو سکتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اپنی زندگی کے اختتام پر سیٹلائٹ فضا میں واپس آجاتے ہیں۔ لیکن لنگوسائٹ مختلف ہے کیوں کہ اس کی لکڑی جل کر گیس بن جاتی ہے جب کہ معدنیات باریک ذرات میں بدل جاتی ہے۔ لکڑی کا استعمال اس لیے بھی معقول ہے کہ اس کی مضبوطی ایلومینیم کے وزن کے برابر ہے۔

Leave a reply