33

عمران خان کی ضمانت ضبط ہو جائے گی؛ بلاول

ہاٹ لائن:وزیر خارجہ اور پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ ریاستی ادارے نیوٹرل نہ رہیں ، خان صاحب مہم چلا رہے ہیں ، پی ٹی آئی چیئر مین جانتے ہیں ادارے نیوٹرل رہے تو ان کی ضمانت ضبط ہو جائے گی۔ قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ نے کہا کہ جناب اسپیکر آپ کی کم تعداد کے باوجود اپوزیشن کو زیادہ اور بھرپور موقع دے رہے ہیں، اندازہ نہیں کہ ایسے بھی اسمبلی چل سکتی ہے۔ عوام جن مسائل کا سامنا کررہے ہیں، ہمیں اس کا اندازہ ہے۔ ملک میں جمہوریت، صاف شفاف الیکشن اور عوام کے معاشی حقوق کے لیے تین نسلوں سے جدوجہد کر رہے ہیں۔ ہم ہر آمر اور ظالم کا سامنا کرکے آئے ہیں۔ پیپلزپارٹی کو دھاندلی کے باوجود حکومت کا موقع ملا، اس ملک میں پیپلز پارٹی کے خلاف دھاندلی ہوتی تھی، شہید بے نظیر اور بھٹو کی جماعت کو روکنے کے لیے دھاندلی ہوتی تھی، لیکن یہ جیت نہیں سکتے۔
اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے پی پی چیئر مین نے سابق وزیر اعظم پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ خان صاحب کو شکایت ہے کہ ادارے نیوٹرل کیسے ہو گئے۔ اگر ادارے نیوٹرل رہیں گے تو غیر جمہوری جماعتیں جیسے عمران خان کی جماعت جیت نہیں سکتی۔ خان صاحب کی طرح سندھ میں بھی کچھ کٹھ پتلی سیاستدان ہیں جن کو سامنے لایا جاتا ہے۔ انہیں معلوم ہے 2018 میں دھاندلی سے یہاں آئے، جب صاف شفاف الیکشن ہوں گے تو انہیں بھاگنے کا موقع نہیں ملے گا۔ الیکشن سے ایک دن پہلے یہ سارے سندھ ہائی کورٹ جمع ہوئے تھے الیکشن سے بھاگیں، ابھی سے ان کا رونا شروع ہوگیا، ابھی انہوں نے مزید رونا دھونا ہے ۔ فیز ٹو میں بھی ہمارے مخالفوں کی ضمانت ضبط ہو جائے گی۔ ان کا خوف یہ ہے کہ ادارے مداخلت نہیں کریں گے اور اگر مداخلت نہیں ہوتی تو پیپلزپارٹی جیتے گی۔ لاڑکانہ سے الیکشن جیتنے پر ہم پر دھاندلی کا الزام لگتا ہے،یہ کس قسم کا مذاق ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں