سعودی عرب نے منفرد اقامہ کی 5 نئی کیٹیگریز متعارف کروا دی

0
59

ہاٹ لائن نیوز : سرمایہ کاروں اور ہنرمند افراد کو مملکت میں راغب کرنے کے لیے ایک اسٹریٹجک اقدام میں، سعودی عرب نے “پریمیم ریزیڈنسی پروڈکٹس” کے تحت نئی ویزا کیٹیگریز متعارف کرائی ہیں۔ ممتاز ریزیڈنسی سینٹر کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین ڈاکٹر ماجد بن عبداللہ القصابی نے اعلان کیا کہ یہ زمرے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے مملکت سعودی عرب کو ہنر کا عالمی مرکز بنانے کے وژن کے مطابق ہیں۔

نئی پریمیم رہائش کی مصنوعات میں شامل ہیں:

خصوصی ٹیلنٹ ویزا: صحت کی دیکھ بھال، سائنس اور تحقیق میں ایگزیکٹوز اور پیشہ ور افراد کو ملےگا، جس کا مقصد منفرد مہارتوں اور تجربے کے حامل افراد کو راغب کرنا ہے۔

باصلاحیت ویزا: سعودی عرب میں ثقافتی اور کھیلوں کے شعبوں میں ہنر مند اور باصلاحیت پیشہ ور افراد کو ضم کرنے کے لیے تیار ہے۔

سرمایہ کار ویزا: سعودی عرب کے فروغ پزیر کاروباری منظر نامے میں مواقع تلاش کرنے والے سرمایہ کاروں کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے، جو پوری معیشت میں اعلیٰ اثر والے منافع کو فروغ دیتا ہے۔

انٹرپرینیور ویزا: سٹارٹ اپس کی حوصلہ افزائی کرنے اور مملکت سعودی عرب کی معاشی تبدیلی میں اپنا حصہ ڈالنے کے خواہشمند کاروباری اور اختراعی کاروباری افراد۔

پراپرٹی اونر ویزا: ان افراد کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے جو رئیل اسٹیٹ کے مالک ہیں، انہیں مملکت میں متحرک رئیل اسٹیٹ مارکیٹ سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ایک غیرمعمولی زندگی کاتجربہ پیش کرتےہیں۔

القصابی نے زور دے کر کہا کہ ان نئی مصنوعات کا مقصد پیشہ ور افراد اور سرمایہ کاری کو راغب کر کے سعودی عرب کی متنوع، علم پر مبنی معیشت کی طرف منتقلی کو تیز کرنا ہے۔ تمام پریمیم رہائش پروڈکٹس ان لوگوں کے لیے کھلے ہیں جو قومی معیشت میں قدر میں اضافہ کر سکتے ہیں اور سعودی ویژن 2030 کے تحت مملکت سعودی عرب کے ترقیاتی سفر میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے سکتے ہیں۔

یہ مصنوعات مختلف سرکاری ایجنسیوں کے اسٹریٹجک پارٹنرز کے تعاون سے تیار کی گئی ہیں، اور بہت سے فوائد فراہم کرتی ہیں، جن میں کاروبار کرنے کی صلاحیت، جائیداد کی ملکیت، اپنے حاملین اور ان کے خاندان کے افراد دونوں کے لیے ورک پرمٹ حاصل کرنا، اور ان کے ساتھ تعاون میں ایک مراعات یافتہ رہائشی حیثیت۔ حکومتی شراکت دار اس اقدام کا مقصد ملک میں معاشی تبدیلی کو فروغ دینا، روزگار کے مواقع پیدا کرنا اور علم کی منتقلی کو آسان بنانا ہے۔

Leave a reply