زرتاج گل آبدیدہ ہو گئیں

0
114

ہاٹ لائن نیوز : پی ٹی آئی کی سابق ایم این اے زرتاج گل گرفتاری سے بچنے کے لیے پشاور ہائی کورٹ میں موجود ہیں۔

سابق وفاقی وزیر زرتاج گل کی گرفتاری کے لیے پولیس کی بھاری نفری پشاور ہائی کورٹ کے باہر موجود ہے۔ وہ 9 مئی کے بعد پہلی بار عوام کے سامنے آئی ہیں۔ آج زرتاج گل نے پشاور ہائی کورٹ میں ضمانت کی درخواست دائر کی۔

زرتاج گل کے وکیل کا کہنا ہے کہ زرتاج گل آج رات پشاور ہائی کورٹ میں گزاریں گی، گدے، کمبل اور کھانا پہنچا دیا گیا ہے، مرد و خواتین وکلاء زرتاج گل کے ساتھ ہوں گے۔

میڈیا سے گفتگو کے دوران زرتاج گل آبدیدہ ہو گئیں۔ انہوں نے کہا کہ جب تک سفری ضمانت نہیں مل جاتی ہائی کورٹ سے باہر نہیں آؤں گا۔ میرا بھائی بم دھماکے میں شہید ہوا۔ میں شہید کی بہن ہوں۔ میں شہیدوں کی بے حرمتی کیسے کر سکتی ہوں؟

زرتاج گل نے کہا کہ ہم کسی ادارے کے خلاف نہیں، ن لیگ کی اداروں سے لڑنے کی کوشش ناکام ہوگئی، سیاست میرا حق ہے، سیاست کرنا صرف سرمایہ داروں کا حق نہیں ۔

زرتاج گل نے کہا کہ آپ 9 مئی کی مذمت کروانا چاہتے ہیں تو معافی مانگتی ہوں، پاک فوج ہماری ہے، پورا ملک ہمارا ہے، ہم پاکستان کے شہری ہیں، میرا قصور یہ ہے کہ میں الیکشن لڑنا چاہتی ہوں۔

زرتاج گل نے کہا کہ میں انصاف کے حصول کے لیے پشاور ہائی کورٹ آئی ہوں، میں صبح 8 بجے سے ضمانت کے لیے ہائی کورٹ میں موجود ہوں، مجھے گرفتار کرنے کے لیے پولیس کی نفری ہائی کورٹ کے باہر موجود ہے۔

Leave a reply