27

حمزہ کے بعدپنجاب کون چلائے گا؟بڑی خبرآگئی

لاہور ہائیکورٹ نے تحریک انصاف کی اپیلوں پر فیصلہ کرتے ہوئے حمزہ شہباز کی حلف برداری کو کالعدم قرار دے دیا ہے ۔ لاہورہائیکورٹ نےتحریری فیصلہ بھی جاری کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق حمزہ شہباز کا عہدہ ختم ہونے کے بعد سردار عثمان بزدار دوبارہ وزیر اعلی پنجاب بن گئے۔وزیر اعلی حمزہ شہباز اور ان کی کابینہ تحلیل ہو گئی ہے۔
لاہور ہائیکورٹ میں جسٹس صداقت علی خان کی سربراہی میں5 رکنی لارجربینچ نے تحریک انصاف کی درخواستوں پر سماعت کی۔ لارجر بینچ میں جسٹس صداقت علی خان کے علاوہ جسٹس شہرام سرور چوہدری، جسٹس ساجد محمود سیٹھی، جسٹس طارق سلیم شیخ اورجسٹس شاہد جمیل خان شامل تھے۔لارجربینچ میں پی ٹی آئی کے علاوہ مسلم لیگ ق اور اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الٰہی کی اپیلوں کی سماعت کی گئی ہے۔ یہ اپیلیں حمزہ شہباز کی بطور وزیراعلیٰ انتخاب اور سنگل بینچ کے فیصلوں کےخلاف دائر کی گئی تھیں، درخواستوں پر 4کے مقابلے میں ایک کا فیصلہ آیا، جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے 4 ججز کے فیصلے سے اختلاف کیا۔عدالت نے وزیراعلیٰ پنجاب کے الیکشن کے خلاف پی ٹی آئی کی درخواستیں منظور کی ہیں جب کہ عدالت نے حلف کے خلاف اپیلوں کو نمٹایا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں