جنوبی افریقہ کی کنٹری گرل انتقال کر گئیں

0
54

ہاٹ لائن نیوز : جنوبی افریقہ کی ایوارڈ یافتہ افریقی پاپ گلوکارہ بولیلوا مکتوکانا جو زہرہ کے نام سے مشہور ہیں، 36 سال کی عمر میں انتقال کر گئیں۔

زہرہ کو جنوبی افریقہ کی ‘کنٹری گرل’ کے نام سے جانا جاتا تھا کیونکہ وہ دیہی مشرقی کیپ صوبے میں پلی بڑھی تھیں۔

گلوکارہ کو چند روز قبل جگر کی پیچیدگی کے باعث اسپتال منتقل کیا گیا تھا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکیں۔ وزیر ثقافت زیزی کودوا کے مطابق حکومت کچھ عرصے سے ان کے خاندان کی مدد کر رہی تھی۔

زہرہ نے 2019 میں انکشاف کیا تھا کہ وہ نشے کی لت میں مبتلا ہیں لیکن اس کے اثرات چھوڑنے کے باوجود باقی رہے۔ گلوکارہ کو گزشتہ ماہ اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

جنوبی افریقی میڈیا کے مطابق زہرہ پیر کی رات جوہانسبرگ کے ایک اسپتال میں انتقال کر گئیں۔

زہرہ اپنی مختصر زندگی میں 2011 میں اپنا البم Loliwe ریلیز کرنے کے بعد شہرت کی بلندیوں پر پہنچ گئیں، وہ پورے افریقہ میں مقبول تھیں۔

زیزی کودوا نے گلوکار کے اہل خانہ سے تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ زہرہ اور اس کے گٹار نے جنوبی افریقہ کی موسیقی پر ناقابل یقین اور دیرپا اثر ڈالا۔

ایکس صارفین بھی ٹرینڈنگ ہیش ٹیگ #RIPZahara کے ساتھ اس کی موت پر تعزیت کر رہے ہیں۔ مداحوں کا خیال ہے کہ زہرہ نے اپنی موسیقی سے بہت سی روحوں کو شفا بخشی۔

اہل خانہ نے گلوکارہ کے انسٹاگرام پر زہرہ کی موت کی افسوسناک خبر پوسٹ کرتے ہوئے کہا کہ ‘زہرہ 11 دسمبر 2023 کو اس دنیا سے چلی گئیں، وہ ایک پاکیزہ روح اور پاکیزہ دل تھیں۔

گلوکارہ نے اپنے گانوں کے ذریعے جنوبی افریقہ میں خواتین کو درپیش تشدد کے خلاف آواز اٹھانے کے لیے اپنا پلیٹ فارم بھی استعمال کیا۔

Leave a reply